چمکتی ہوئی جلد کے لیے دہی کے استعمال کے پانچ موثر طریقے

چمکتی ہوئی جلد کے لیے دہی کے استعمال کے پانچ موثر طریقے

جیسا کہ ہم سب جانتے ہیں، دہی پروٹین، پروبائیوٹکس اور کیلشیم سے بھری ہوتی ہے۔

خمیر شدہ دودھ کی مصنوعات نہ صرف صحت مند کھانے کا انتخاب ہیں۔ لیکن یہ ایک محفوظ جلد کی دیکھ بھال کی مصنوعات کے طور پر بھی جانا جاتا ہے۔

ایک اچھے موئسچرائزر کے طور پر کام کرنے سے لے کر پھیکی جلد کو چمکانے تک۔ دہی کا استعمال آپ کی جلد کی دیکھ بھال کے معمولات کا ایک لازمی حصہ بن گیا ہے۔

یہاں کچھ تجاویز ہیں کہ آپ چمکدار جلد حاصل کرنے کے لیے دہی پر مبنی ماسک کیسے استعمال کر سکتے ہیں۔

دہی کو موئسچرائزر کے طور پر استعمال کریں۔

طبی مطالعہ سے دہی جلد سے پانی کی کمی کو کم کرتا ہے۔ اس کا مطلب ہے کہ دہی گا “نمی برقرار رکھیں”

اگر آپ اپنی جلد کو بحال کرنا چاہتے ہیں۔ دہی کو کوکو پاؤڈر اور شہد کے ساتھ کم از کم 30 منٹ تک چہرے پر لگائیں۔

اس سے آپ کو صحت مند اور چمکدار جلد حاصل کرنے میں مدد ملے گی۔

جھریوں اور باریک لکیروں کے لیے دہی کا اسکرب

نیشنل لائبریری آف میڈیسن کے مطالعہ سے دہی میں موجود پروبائیوٹکس جلد کو بڑھاپے کے آثار سے بچانے میں مدد کر سکتے ہیں۔

دلیا کے ساتھ دہی ملا کر ہر ہفتے چہرے پر لگائیں۔ کیونکہ یہ جھریوں اور مختلف جھریوں سے لڑنے میں مدد کرتا ہے۔

داغ دھبوں اور روغن کو دور کرتا ہے۔

دہی کا لییکٹک ایسڈ جزو ہے جس کی وجہ سے یہ ناہموار رنگت کو ہموار کرتا ہے اور داغوں کو دور کرتا ہے۔

لیکٹک ایسڈ جلد کی سب سے بیرونی تہہ کو ہٹاتا ہے جس کے نتیجے میں جلد کے نئے خلیات بنتے ہیں۔

دہی اور لیموں کا رس ایکنی سے متاثرہ جگہ پر 15 منٹ تک لگائیں تاکہ جلد چمکدار اور بے عیب نظر آئے۔

دہی سیاہ حلقوں سے لڑتا ہے۔

دہی کی سوزش مخالف خصوصیات یہ سوجن کو کم کرتا ہے اور سیاہ حلقوں کو کم کرنے میں مدد کرتا ہے۔ اس میں موجود لیکٹک ایسڈ سیاہ حلقوں کو دور کرنے میں بھی مددگار ثابت ہوتا ہے۔

ایک صاف روئی کی گیند کو دہی میں ڈبو کر آہستہ سے اپنی آنکھوں کے نیچے 10 منٹ تک بھگو دیں، پھر صاف پانی سے دھو لیں۔

دہی کے ساتھ دھوپ کی جلن کا علاج کریں۔

سورج سے نکلنے والی UV شعاعیں سنبرن کا سبب ہیں۔ اس سے جلد کو نقصان پہنچتا ہے جس سے چھالے اور سرخی ہو سکتی ہے۔

دہی کو اوپری طور پر متاثرہ جگہ پر لگانے سے شفا یابی کے عمل میں مدد ملے گی۔

اپنی رائےکا اظہار کریں